دکھاناچاہتا ہوں عدالت سب کو عوامی سطح پر قابل احتساب بناتی ہے، جسٹس فائزعیسیٰ کے براہ راست کوریج کی درخواست پر دلائل

اسلام آباد.نظرثانی کیس کی براہ راست کوریج کی درخواست پر جسٹس فائز عیسیٰ نے کہاکہ کبھی نہیں کہ تمام مقدمات میں براہ راست کوریج ہو،صرف اپنے کیس کی براہ راست کوریج کی استدعا کی ہے ،دکھاناچاہتا ہوں عدالت سب کو عوامی سطح پر قابل احتساب بناتی ہے۔

نجی ٹی وی سما نیوز کے مطابق جسٹس قاضی فائزعیسیٰ نظرثانی کیس کی براہ راست کوریج کی درخواست پر سماعت جاری ہے، جسٹس عمر عطابندیال کی سربراہی میں 10 رکنی بنچ سماعت کررہاہے، جسٹس قاضی فائزعیسیٰ نے دلائل دیتے ہوئے کہاکہ وزیراعظم اوروزیرقانون نے درخواست کی مخالفت نہیں کی ،اے اے جی نے حکومت، صدر، اے جی کی طرف سے مخالفت کی۔

جسٹس فائز عیسیٰ نے کہاکہ کبھی نہیں کہ تمام مقدمات میں براہ راست کوریج ہو،صرف اپنے کیس کی براہ راست کوریج کی استدعا کی ہے ،دکھاناچاہتا ہوں عدالت سب کو عوامی سطح پر قابل احتساب بناتی ہے۔

جسٹس فائزعیسیٰ نے کہاکہ جسٹس عمرعطابندیال کے علاوہ سب ججز میرے جونیئر ہیں ،پراپیگنڈاہورہاہے کہ جونیئر جج کبھی سینئر کیخلاف فیصلہ نہیں دیں گے ،کہاگیاعدالت معاملہ فل کورٹ میٹنگ میں بھجوا دے،اگرچیف جسٹس فل کورٹ میٹنگ ہی نہ بلائیں تو کیا ہوگا؟

اپنا تبصرہ بھیجیں