نوجوان لڑکی نے اپنے شوہر سے حق مہر میں کیا چیز مانگ لی ؟ دلہن کا ویڈیو پیغام سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا

لاہور .عام طور پر شادیوں میں خواتین کو حق میں بھاری بھرکم سونے کی سیٹ اور قیمتی تحائف دیئے جاتے ہیں اور مطالبہ بھی کیا جاتاہے لیکن کے پی کے سے تعلق رکھنے والی دلہن نے تمام روایات کو توڑتے ہوئے اپنے شوہر سے حق مہر میں ایک لاکھ روپے کی کتابیں مانگ لی ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر خیبر پختونخوا کے شہر مردان کی نائلہ شمال نامی دلہن کی ایک ویڈیو سامنے آئی ہے جس میں وہ بتا رہی ہیں کہ انہوں نے حق مہر میں ایک لاکھ کی کتابیں مانگی ہیں۔ وہ کہتی ہیں کہ میں نے اپنے حق مہر میں ایک لاکھ کی کتابیں مانگی ہیں،حق مہر میں ایک لاکھ کی کتابیں مانگنے کی وجہ یہ ہے کہ ہمارے ملک میں مہنگائی بہت زیادہ ہے، مہنگائی کی وجہ سے ہم یہ چیزیں افورڈ نہیں کر سکتے اور دوسری وجہ یہ ہے کہ ان غلط رسومات کا خاتمہ بھی ضروری ہے۔ان کا کہناتھا کہ ہمارے معاشرے میں ان غلط رسومات کی وجہ سے ہماری زندگی روز بروز ایک عذاب بنتی جا رہی ہے، سونا اور پیسہ ہر عورت مانگتی ہے لیکن ایک مصنفہ ہونے کی حیثیت سے میں نے کتابیں اس لیے مانگیں کہ اگر ہم کتابوں کی قدر نہیں کرتے تو ہم عام لوگوں سے اس کی قدر کی توقع کیسے کر سکتے ہیں۔ نائلہ شمال کا مزید کہنا تھا کہ میرے اس حق مہر مانگنے کی اصل وجہ یہ ہے کہ ہمیں خود کتابوں کی قدر کرنی چاہیے تاکہ ہم دوسروں کو بھی ہماری نصیحت پر عمل کرنے کا کہہ سکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں