امریکہ کا محمد بن سلمان پر جمال خاشقجی کے قتل کا الزام، پوری دنیا کے عرب اکٹھے ہوگئے، ایسا کام کردیا کہ جوبائیڈن نے سوچا بھی نہ ہوگا

ریاض . امریکہ کی جانب سے سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان کو صحافی جمال خاشقجی کے قتل کا براہ راست ذمہ دار قرار دیے جانے کے بعد پوری دنیا کے عرب عوام اکٹھے ہوکر محمد بن سلمان کی حمایت میں کھل کر سامنے آگئے۔

امریکہ کی جانب سے گزشتہ روز کانگریس میں صحافی جمال خاشقجی کے قتل کی انٹیلی جنس رپورٹ پیش کی گئی ہے۔ اس رپورٹ میں سعودی ولی عہد کو براہ راست صحافی کے قتل کا ذمہ دار قرار دیا گیا ہے۔سعودی عرب نے اس رپورٹ کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا ہے جبکہ متحدہ عرب امارات، کویت اور عرب پارلیمنٹ نے اس معاملے پر سعودی عرب کی حمایت کی ہے۔

حکومتی سطح پر حمایت کے علاوہ عوامی سطح پر بھی سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان کی عرب دنیا میں حمایت کی جا رہی ہے ۔سعودی عرب سمیت اکثر عرب ممالک میں ’کلنا محمد بن سلمان ‘ (ہم سب محمد بن سلمان ہیں) کا ہیش ٹیگ ٹوئٹر کے ٹاپ ٹرینڈز میں شامل ہے۔

سعودی عرب کے اہم اتحادی ملک متحدہ عرب امارات میں محمد بن سلمان کے ساتھ یکجہتی کے اظہار کیلئے نہ صرف ’کلنا محمد بن سلمان‘ کا ہیش ٹیگ ٹرینڈ کر رہا ہے بلکہ یہاں ’ الامارات تحب بو سلمان ‘ (امارات بو سلمان سے محبت کرتا ہے) کا ٹرینڈ بھی ٹوئٹر پر چل رہا ہے۔

کویت میں نہ صرف ’کلنا محمد بن سلمان‘ کا ہیش ٹیگ ٹوئٹر کے ٹاپ ٹرینڈز میں شامل ہے بلکہ یہاں کے عوام امریکہ کے مقاطعہ کا بھی مطالبہ کر رہے ہیں۔

افریقی عرب ملک مصر میں بھی محمد بن سلمان کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیا جا رہا ہے۔ یہاں امریکہ کے تو نہیں البتہ فرانس کے مقاطعہ کا مطالبہ ٹوئٹر کے ٹاپ ٹرینڈز میں شامل ہے۔

اس کے علاوہ بحرین،عراق، قطر اورسلطنتِ عمان میں بھی سوشل میڈیا پر سعودی ولی عہد محمد بن سلمان سے یکجہتی کا اظہار کیا جا رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں